شہباز خاندان کے خلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کا تحریری حکم جاری

احتساب عدالت نے شہباز خاندان کے خلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کا تحریری حکم جاری کر دیا۔ عدالت نے شہباز شریف سے سہولیات کی عدم فراہمی پر تحریری درخواست طلب کرلی۔
شہباز خاندان کے خلاف منی لانڈرنگ کیس میں احتساب عدالت کے ایڈمن جج جواد الحسن نے گزشتہ سماعت کا 4 صفحات پر مشتمل تحریری حکم جاری کر دیا۔ عدالت نے نصرت شہباز کی حاضری معافی کی درخواست مسترد کر دی اور ڈی جی نیب سے شہباز شریف کی اہلیہ کی منقولہ اور غیر منقولہ جائیداد کا ریکارڈ طلب کرلیا۔
عدالت نے نصرت شہباز کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کرنے کا بھی حکم دیا، اشتہاری ہونے کے متعلق اشتہارات مختلف مقامات پر آویزاں کرنے کی ہدایت کی گئی۔ تحریری فیصلے میں کہا گیا کہ شہباز شریف نے میڈیکل سہولیات کی شکایات کیں، عدالت نے ہدایت کی کہ شہباز شریف آئندہ سماعت پر سہولیات کی عدم فراہمی پر تحریری درخواست جمع کروائیں۔
تحریری فیصلے میں مزید کہا گیا کہ سلمان شہباز، رابعہ عمران سمیت 3 ملزمان جان بوجھ کر پیش نہیں ہو رہے۔ عدالت نے شہباز شریف سمیت 10 ملزمان کو وعدہ معاف گواہ کی کاپیاں فراہم کر دیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں