کورونا کے پاکستان میں حملے جاری

حیات آباد میڈیکل کمپلیکس پشاورکے دو سینئر ڈاکٹرز کورونا کاشکار،تعلیمی اداروں کے 83 ملازمین بھی وبا کی لپیٹ میں آگئے ، پشاور میں 7 جبکہ اسلام آباد کے مختلف سب سیکٹرز میں لاک ڈاؤن نافذ کر دیا گیا
پاکستان میں کورونا کی دوسری لہر شدت اختیار کرنے لگی،پشاور کے حیات آباد میڈیکل کمپلیکس کے 2سینئر ڈاکٹرز کورونا کا شکار ،
کورونا سے متاثرہ ڈاکٹرز کی تعداد 200 تک پہنچ گئی ۔تعلیمی اداروں کے 83 ملازمین میں وائرس کی تصدیق ،،کل تعداد ایک ہزار 49 ہوگئی،،، محکمہ صحت کے مطابق ، تعلیمی اداروں میں کیسز کی شرح 1.37 فیصد ہو گئی ۔جامعہ پشاور نے 14نومبر کو کانووکیشن کی تقریب موخر کردی ضلعی انتظامیہ نے پشاور کے 7علاقئے سیل کر دئیے۔اسلام آباد کے مختلف سب سیکٹرز میں صبح 10 بجے سےمکمل لاک ڈاون کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا ہے۔جن میں آئی ایٹ تھری، فور،،،جی نائن ون، جی ٹین فور اور جی سیکستھ ٹو شامل ہیں۔
حکومت کے ایس او پیز پر عمل درآمدکیلئے سخت اقدامات،،ماسک نہ پہننے والوں کو 100روپے جرمانہ، تین ماسک دینے کا فیصلہ کرلیا،
این سی او سی سے جاری اعداد و شمار کےمطابق،،، مزید 25 افراد جان سے ہاتھ دھو بیٹھے،،ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 6 ہزار 968 ہو گئی،،،24 گھنٹے کے دوران مزید ایک ہزار چار سو چھتیس کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں